December 03, 2018

اتفاق و اتحاد

ایک جنگل میں بہت سے پرندے ایک ساتھ مل کر ہنسی خوشی ہنس گا رہے تھے کہ کہیں سے ایک عقاب آ یا اور ایک طوطے کو اٹھا کر لے گیا، یہ خوفناک منظر دیکھ کر سارے پرندے اپنے اپنے گھونسلے میں جا گھسے، دوسرے دن پھر سب کی محفل جمی اور عقاب پھر آدھمکا، اب وہ روزانہ اپنے وقت پر آتا اور ایک پرندہ اٹھا کر لے جاتا، اب سب پرندوں نے گھونسلے سے باہر نکلنا ہی چھوڑ دیا لیکن عقاب ہار ماننے والا نہ تھا، اس نے پرندوں کو گھونسلے سے اچکنا شروع کردیا۔ سب پرندے پریشان تھے کہ آخر عقاب سے بچیں تو بچیں کیسے؟ ایک دن ایک بلبل کا بچہ اٹھا کر لے گیا تو بہادر بلبل نے اس کا پیچھا کیا ۔ دیکھا کہ اس نے تو بہت محفوظ جگہ بنائی ہوئی ہے تو وہ اسی وقت ساتھ والے گائوں گئی اور کہیں سے ایک جال لے آئی ،ابھی عقاب بلبل کے بچے کو کھانے ہی والا تھا کہ بلبل نے اس کے اوپر جال پھینک دیا۔ عقاب اس میں جکڑ گیا، عقاب نے بلبل کو بہت چونچیں ماری اور جال سے نکلنے کی کوشش کی لیکن بلبل نے بہادری سے کام لیا اور عقاب کو مضبوطی سے جال میں پھنسا دیا۔ اس وقت دوسرے پرندے بھی آ گئے اور سب نے مل کر عقاب کو اٹھایا اور ایک دریا میں پھینک دیا اور اس طرح بلبل کی بہادری اور عقلمندی کی وجہ سے بلبل کا بچہ بھی بچ گیا اور سب پرندوں نے عقاب سے چھٹکارا بھی پا لیا۔ یوں سب ہنسی خوشی رہنے لگے۔
(سعدیہ بتول… گمل کلاں)