January 07, 2019
خوش آمدید نئے سال

خوش آمدید نئے سال

اب کے برس ہوں سب نہال

سال کے 365دن کیسے گزرے،اچھے یا برے، نئے سال کی آمد پر ہر انسان چاہتا ہے کہ وہ آنے والے برس کو بانہیں پھیلا کر خوش آمدید کہے۔ ہر انسان کے لبوں پر یہی دعائیں ہوتی ہیں کہ نیا سال سب کے لیے مسرتیں اور کامیابیاں لے کر آئے۔ دنیا بھر میں نئے عیسوی سال 2019ء کو خوش آمدید کہنے اور 2018ء کو الوداع کہنے کے لیے کروڑوں لوگوں نے انتظامات کئے تھے۔ سال نو کا آغاز 31دسمبر کی رات 12بجے ہوتا ہے۔ روایتی طور پر مختلف ممالک میں نئے سال کو آتش بازی اور لائٹ شوز سے خوش آمدید کہا جاتا ہے، میوزیکل کنسرٹس اور دیگر تقریبات کا اہتمام بھی کیا جاتا ہے۔اس برس بھی کروڑوں لوگوں نے سال نو کی تقریبات میں شرکت کر کے جشن منایا اور ایک دوسرے کو مبارکباد دے کر اپنی خوشی کا اظہار کیا۔ متعدد ممالک میں لوگوں نے تمتماتے چہروں کے ساتھ رنگوں میں نہائے آسمان کو دیکھ کر نیا سال شروع کیا۔
پاکستان میں سال 2018ء کا سورج غروب کئی ممالک کے بعد ہوا، اورپاکستان میں 2019ء کے آغاز سے کئی گھنٹے قبل ہی دنیا کے کچھ ممالک میں نئے سال کو ویلکم کرنے کا سلسلہ شروع ہوگیا۔ سب سے پہلے 2019ء کا آغاز وسطی بحریہ اوقیانوس کے جزائر ٹونگا اور کیریباتی میں ہوا، جہاں پاکستان سے نو گھنٹے قبل ہی نیا سال شروع ہوگیا۔ پاکستان میں31دسمبر 2018ء کو سہ پہر تین بجے تھے، جبکہ ٹونگا میں گھڑی کا کانٹا 12 پر جاچکا تھا اور یکم جنوری 2019ء شروع ہوگیا تھا۔ ٹونگا اور کریباتی میں سال نو شروع ہونے کے 15منٹ بعد نیوزی لینڈ میں 2019ء کو خوش آمدید کہا گیا۔ نیوزی لینڈ کے دارالحکومت آکلینڈ میں ہر سال کی طرح اس برس بھی شاندار آتش بازی کا اہتمام کیا گیا۔
پھر روس کے دور دراز جزائر میں 2019ء نے دستک دی۔ اس کے بعد آسٹریلیا میں 2019ء کا آغاز ہوا، دارالحکومت سڈنی کے تاریخی ہاربر برج پر آتش بازی نے سارا منظر جگمگادیا۔ سڈنی ہاربر برج پرہونے والی آتش بازی کو ہر سال کی طرح اس سال بھی دنیا بھر سے لاکھوں افراد دیکھنے پہنچے اور اپنی آنکھوں میں رنگین یادیں سجانے میں کامیاب ہوگئے۔ براعظم آسٹریلیا کے بعد سال 2019 ء کا آغاز جاپان، جنوبی کوریا اور اس کے قریبی ممالک میں ہوا۔ جاپان، شمالی کوریا، فلپائن، چین، انڈونیشیا، تھائی لینڈ، میانمار، بنگلا دیش، نیپال، سری لنکا اور بھارت سے ہوتا ہوا سال 2019ء پاکستان کی دہلیز پر پہنچا جہاں پوری قوم نے اس کا امیدوں، دعاؤں اور مسکراہٹوں کے ساتھ استقبال کیا۔ سب سے آخر میں بحرالکاہل کے جزیرے ہاؤلینڈ میں 2019ء کا آغاز ہوا۔
پاکستان میں بھی نئے سال کے استقبال کا جشن آتش بازی، محافل موسیقی اور روایتی رقص کے ساتھ کیا گیا۔ دارالحکومت اسلام آباد، لاہور اور کراچی سمیت مختلف شہروں میں کنسرٹس کا بھی اہتمام کیا گیا۔ کراچی میں سی ویو پر نوجوانوں نے سماں باندھا۔ وزیر اعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ نے سیکریٹری داخلہ کی جانب سے لگائی گئی ڈبل سواری کی پابندی کو بھی نئے سال کی خوشی میں ختم کر دیا تھا۔