January 07, 2019
منیشا کوائرالہ کی کتاب

منیشا کوائرالہ کی کتاب

بولی وڈ کی مقبول اداکارہ منیشا کوائرالا کینسر کی بیماری کو شکست دے کر فلمی دنیا کی واپسی بھی کرچکی ہیں۔ 48 سالہ منیشا کوئرالا اگرچہ پہلے بھی کینسر کی بیماری پر کھل کر بات کرچکی ہیں، تاہم اب انہوں نے اس موذی مرض سے لڑنے اور اس سے جان چھڑانے پر ایک کتاب لکھی ہے، جسے شائع کر دیا گیا۔ منیشا کوئرالا 2012ء میں ’’اورین کینسر‘‘ میں مبتلا ہوگئی تھیں اور کئی ماہ تک ان کا علاج ہوا تھا۔ بعد ازاں امریکا میں ان کی سرجری کی گئی تھی۔ سرجری کے بعد اداکارہ کو کینسر فری قرار دیا گیا تھا اور کینسر فری زندگی کے 6 سال مکمل ہونے پر انہوں نے بیماری سے لڑنے اور اس میں کامیابی حاصل کرنے پر کتاب لکھی ہے۔ منیشا کوئرالا نے یہ کتاب مصنفہ نیلم کمار کے ساتھ مل کر لکھی ہے۔ کتاب کا عنوان ’’ہیلڈ: ہاؤ کینسر گیو می اے نیو لائف‘‘ ہے۔ کتاب میں منیشا نے اس بات کا اعتراف کیا ہے کہ انہیں یہ جان لیوا بیماری اپنی ہی غفلت کی وجہ سے لگی۔ نیپالی نژاد بولی وڈ اداکارہ نے کتاب میں لکھا ہے کہ انہوں نے خود اپنے اوپر ظلم کیا، تاہم اب وہ کینسر کی بیماری کو اپنے لیے غنیمت سمجھتی ہیں۔ اداکارہ نے اعتراف کیا ہے کہ انہوں نے اپنے جسم کی حفاظت نہیں کی اور انتہائی لاپروا طرز زندگی گزارنے کی وجہ سے انہیں کینسر لاحق ہوا۔ اداکارہ نے اعتراف کیا کہ اگر انہیں کینسر لاحق نہیں ہوتا تو وہ کسی اور بیماری میں مر سکتی تھیں تاہم اب انہیں محسوس ہوتا ہے کہ کینسر ان کے لیے غنیمت تھا، کیوں کہ اس سے صحتمند ہونے کے بعد انہوں نے زندگی سے بہت کچھ سیکھا اور اب وہ پہلے سے اچھی اور بہتر زندگی گزار رہی ہیں۔ منیشا نے اپنی کتاب میں کینسر سے قبل اپنے طرز زندگی پر بھی کھل کر بات کی ہے اور ان کی کتاب سے پتہ چلتا ہے کہ وہ شراب نوشی بھی کرتی رہیں۔ منیشا کوئرالا نے کینسر سے متعلق شعور اجاگر کرنے کے لیے یہ کتاب ایسے وقت میں شائع کی ہے جب بولی وڈ کے متعدد اداکار کینسر کے مرض سے جنگ لڑ رہے ہیں۔ بولی وڈ اداکار عرفان خان نیورو اینڈوکرائن ٹیومر میں مبتلا ہیں اور اب ان کی صحت بہتر ہونے کی اطلاعات ہیں۔ اداکارہ سونالی باندرے بھی گزشتہ برس کینسر کا شکار ہوئیں۔ بولی وڈ اداکار آیوشمان کھرانہ کی اہلیہ طاہرہ کشپ کو بھی بریسٹ کینسر لاحق ہے۔