تازہ شمارہ
Title Image
March 04, 2019
اولمپک کمیٹی بھارت کو پڑ گئے لینے کے دینے

اولمپک کمیٹی بھارت کو پڑ گئے لینے کے دینے

پاکستانی ایتھلیٹس کو انٹرنیشنل شوٹنگ ایونٹ کے لیے ویزا جاری نہ کرنا بھارت کو مہنگا پڑ گیا اور انٹرنیشنل اولمپک کمیٹی نے بھارت سے مستقبل کے تمام عالمی ایونٹس کی میزبانی چھین لی۔ نئی دہلی میں شوٹنگ ایونٹ کے ورلڈ کپ کا انعقاد ہونا تھا جو اولمپکس 2020 ء کا کوالیفائنگ راؤنڈ بھی تھا لیکن بھارت نے اس ایونٹ کے لیے پاکستانی ایتھلیٹس کو ویزا جاری کرنے سے انکار کردیا۔2 پاکستانی شوٹرز جی ایم بشیر اور خلیل احمد جبکہ ان کے منیجرز کو ایونٹ میں شرکت کرنا تھی لیکن وہ بدھ کو ایونٹ کی رسمی کارروائیوں کے لیے بھارت نہیں پہنچے۔ انٹرنیشنل شوٹنگ اسپورٹس فیڈریشن اور انٹرنیشنل اولمپکس کمیٹی کو خبردار کیا تھا کہ وہ اس اقدام سے باز رہیں کیونکہ ایسی صورت میں انہیں مستقبل میں کسی بھی ایونٹ کی میزبانی نہیں دی جائے گی لیکن اس کے باوجود انہوں نے پاکستانی ایتھلیٹس کو ویزا جاری نہ کیا۔ انٹرنیشنل اولمپک کمیٹی نے بھارتی ہٹ دھرمی پر انہیں مستقبل کے تمام عالمی ایونٹس کی میزبانی سے محروم کردیا ہے جبکہ موجودہ ایونٹ سے بھی اولمپکس کے کوالیفائنگ راؤنڈ کا درجہ واپس لے لیا گیا ہے۔ انٹرنیشنل اولمپک کمیٹی کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیا کہ میزبان ملک کی جانب سے سیاسی مداخلت اور امتیازی سلوک روا رکھتے ہوئے ایتھلیٹس کو ویزا کی فراہمی سے انکار اولمپکس کے چارٹر کی خلاف ورزی ہے۔ بیان میں کہا گیا کہ آخری لمحات پر کی گئی کوششوں اور بھارتی حکام سے مذاکرات کے باوجود پاکستانی وفد کے بھارت داخلے کی اجازت کے حوالے سے کوئی نتیجہ نہ نکل سکا۔ انٹرنیشنل اولمپک کمیٹی نے کہا کہ اس کے نتیجے میں کمیٹی کے ایگزیکٹیو بورڈ نے بھارت کو مستقبل کے اولمپکس سمیت کھیلوں سے منسلک تمام ایونٹ کی میزبانی دینے کے حوالے سے بھارتی حکومت سے ہر قسم کی مشاورت ختم کردی ہے اور انہیں مستقبل میں کسی بھی ایونٹ کی میزبانی نہیں دی جائے گی۔ اس کے ساتھ ساتھ کمیٹی نے دنیا کی تمام عالمی اسپورٹس فیڈریشنز سے درخواست کی ہے کہ جب تک بھارتی حکومت تحریری طور پر تمام ایتھلیٹس کو ایونٹ میں شرکت کی اجازت دینے کی ضمانت نہ دے، اس وقت تک وہ بھارت میں ایونٹس کا انعقاد نہ کریں یا انہیں مستقبل کے مقابلوں کی میزبانی نہ دیں۔ انڈین اولمپکس ایسوسی ایشن نے 2026 ء کے یوتھ اولمپکس کے لیے باقاعدہ روڈ میپ تیار کر کے جمع کرایا تھا جبکہ اس نے ایشین گیمز 2030 ء اور 2032 ء میں پہلی مرتبہ اولمپکس کی میزبانی کی خواہش بھی ظاہر کی تھی۔ انڈین اولمپک ایسوسی ایشن کے سیکریٹری راجیو مہتا نے اس صورتحال کو ملک کے تمام کھیلوں کے لیے بڑا دھچکا قرار دیتے ہوئے کہا کہ ہم حکومت سے مکمل رابطے میں ہیں اور پاکستانی شوٹرز کو ویزا دیے کے لیے قائل کرنے کی کوشش کر رہے ہیں۔ یاد رہے کہ گزشتہ سال بھارت نے نئی دہلی میں ویمنز ورلڈ چیمپیئن شپ کے لیے کوسووو کی باکسر کو ویزا دینے سے انکار کردیا تھا کیونکہ بھارت کوسووو کو ایک آزاد ریاست تسلیم نہیں کیا۔ راجیو مہتا نے کہا کہ ہم اس بحران کے حوالے سے حکومت سے بات کر کے کوئی راہ تلاش کرنے کی کوشش کریں گے۔ آئندہ سال ٹوکیو میں ہونے والے اولمپکس مقابلوں کے لیے شوٹنگ مقابلوں میں دو جگہیں خالی ہیں اور ان جگہوں کو پُر کرنے کے لیے نئی دہلی میں ہونے والے 25میٹر شوٹنگ ایونٹ میں پاکستانی شوٹرز کو شرکت کرنا تھی۔