تازہ شمارہ
Title Image
March 11, 2019
سری لنکا کی تاریخ ساز فتح

سری لنکا کی تاریخ ساز فتح

سری لنکا نے جنوبی افریقہ کو شکست دے کر ٹیسٹ کرکٹ میں نئی تاریخ رقم کردی اور وہ جنوبی افریقہ کو اسی کی سرزمین پر ٹیسٹ سیریز میں شکست دینے والی پہلی ایشین ٹیم بن گئی ہے۔ پورٹ الزبتھ میں کھیلے گئے سیریز کے دوسرے ٹیسٹ میچ میں سیریز میں 0-1 کے خسارے سے دوچار جنوبی افریقی ٹیم نے ٹاس جیت کر پہلے بیٹنگ کا فیصلہ کیا جو کچھ اچھا ثابت نہ ہوا۔ ایڈن مرکرم کے 60 ؍اور کوئنٹن ڈی کوک کی 86 رنز کی عمدہ اننگز کے باوجود جنوبی افریقہ کی پوری ٹیم پہلی اننگز میں 222 رنز بنا کر ڈھیر ہو گئی۔ جواب میں کگیسو ربادا اور ڈوانے اولیویئر عمدہ بولنگ کر کے اپنی ٹیم کو میچ میں واپس لے آئے اور پوری سری لنکن ٹیم کو 154 رنز پر ٹھکانے لگا کر اپنی ٹیم کو 58رنز کی برتری دلا دی۔ لیکن سری لنکن بولرز نے ہمت نہ ہاری اور دوسری اننگز میں سورنگا لکمل سمیت دیگر بولرز نے شاندار بولنگ کے سامنے پوری جنوبی افریقی ٹیم صرف 128؍رنز پر ڈھیر ہو گئی اور سری لنکا کو میچ میں فتح کے لیے 197 ؍رنز کا ہدف دیا۔ ہدف کے تعاقب میں سری لنکن اوپنرز 34رنز پر پویلین لوٹ چکے تھے لیکن اس کے بعد اوشادا فرنینڈو اور کوشل مینڈس جنوبی افریقی بولرز کے خلاف ڈٹ گئے اور عمدہ بیٹنگ کا مظاہرہ کرتے ہوئے تاریخ رقم کرنے کی ٹھان لی۔ دونوں کھلاڑیوں نے ناقابل شکست 163 ؍رنز کی شراکت قائم کر کے اپنی ٹیم کو میچ میں 8وکٹ سے فتح دلانے کے ساتھ ساتھ نئی تاریخ رقم کردی۔ سری لنکا کی ٹیم جنوبی افریقہ کو انہی کی سرزمین پر شکست دینے والی پہلی ایشین ٹیم ہے اور اس سے قبل پاکستان اور بھارت سمیت کوئی بھی ایشین ٹیم یہ کارنامہ انجام نہ دے سکی۔ میچ تیسرے دن کے پہلے سیشن میں ہی اختتام پذیر ہو گیا، فرنینڈو نے 75 ؍اور مینڈس نے 84 رنز کی شاندار اننگز کھیلیں۔ سری لنکا نے دو میچوں کی سیریز میں 0-2 سے کلین سوئپ کیا، کوشل مینڈس میچ کے بہترین کھلاڑی قرار پائے جبکہ کوشل پریرا سیریز کے بہترین کھلاڑی کا ایوارڈ لے اڑے۔اس تاریخ ساز فتح پر سری لنکن ٹیم ایک بار پھر اپنے ملک میں مقبولیت اختیار کر گئی ہے۔